’’ کوئی پوچھے تو کہنا خان آیا تھا ۔۔۔‘‘ آصف زرداری، نواز شریف، حمزہ شہباز اور الطاف حسین کی گرفتاری پر حکومت کا دلچسپ رد عمل

" >

کراچی (نیوز ڈیسک) آج کا دن پاکستان کی سیاست میں نہایت اہم دن تصور کیا جا رہا ہے۔ آج صبح سب سے پہلے مسلم لیگ ن کے رہنما اور اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کی درخواست ضمانت مسترد ہوئی اور نیب نے انہیں حراست میں لے لیا ۔ جس کے بعد احتساب

عدالت کے جج محمد بشیر نے سابق صدر آصف علی زرداری کو 21 جون تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا اور پھر لندن سے ایک خبر موصول ہوئی کہ اسکاٹ لینڈ یارڈ نے بانی ایم کیو ایم الطاف حسین کو گرفتار کر لیا ہے۔پاکستان میں کل اور آج ہونے والی گرفتاریوں نے سیاست میں بھی ایک ہلچل مچا دی ہے۔ اس حوالے سے سوشل میڈیا پر بھی دلچسپ تبصرے ہورہے ہیں۔ ان گرفتاریوں پر ایک صحافی نے وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی سے سوال کیا کہ سنا ہے کہ بانی ایم کیو ایم کو گرفتار کر لیا گیا ہے جس پر وفاقی وزیر علی زیدی نے کہا کہ متحدہ بانی گرفتار، حمزہ بھی گرفتار ، کوئی پوچھے تو کہنا ”خان آیا تھا”۔دوسری جانب وزیراعظم عمران خان کو بھی بانی ایم کیو ایم کی گرفتاری سے متعلق آگاہ کر دیا گیا ہے۔ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت پاکستان تحریک انصاف کا پارلیمانی اجلاس جاری تھا جس میں عمران خان کو بانی ایم کیوایم کی گرفتاری سے متعلق آگاہ کیا گیا۔ جس پر وزیراعظم عمران خان نے رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ پہنچی وہیں پر خاک جہاں کا خمیر تھا۔انہوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ کو پاکستان پر رحم آ گیا ہے۔ اپوزیشن رہنماؤں کی گرفتاری پر رد عمل دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ان لوگوں کی گرفتاری سے ہمیں فائدہ ہو گا۔ واضح رہے کہ بانی ایم کیو ایم کو اسکاٹ لینڈ یارڈ نے گرفتار کر کے مقامی پولیس اسٹیشن منتقل کیا جہاں ان سے تفتیش جاری ہے۔ بانی ایم کیو ایم کی گرفتاری پر ایم کیو ایم کی جانب سے کسی رد عمل کا اظہار نہیں کیا گیا اور نہ ہی کسی ایم کیو ایم رہنما نے بانی ایم کیو ایم کی گرفتاری پر تاحال کوئی بیان دیا۔

(Visited 3 times, 1 visits today)