چوہدری نثار کے سیاسی تابوت میں آخری کیل ٹھوکنے کے لیے پی ٹی آئی اور مسلم لیگ (ن) متحد۔۔۔ناقابل یقین فیصلہ کر لیا گیا

" >

لاہور (ویب ڈیسک) مشترکہ مقصد کے حصول کیلئے تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن متحد ہوگئے،سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار کو پنجاب اسمبلی کی نشست سے ڈی سیٹ کروانے کیلئے پنجاب میں حکومت اور اپوزیشن ایک موقف پر متفق ہوگئے۔ پنجاب اسمبلی میں سابق وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان کو ڈی سیٹ کرنے کا معاملہ۔
حکومت اور اپوزیشن ایک پیچ پر آگئے۔حکومتی اور بعض اپوزیشن ارکان کا کہنا ہے چودھری نثار حلف نہ اٹھا کر عوام کے مینڈیٹ کی توہین کر رہے ہیں۔ منتخب ارکان کا حلف نہ اٹھانا بھاری پڑ سکتا ہے۔ حلف نہ اٹھانے والے چودھری نثار علی خان کو ڈی سیٹ کرنے کیلئےحکومت اور اپوزیشن ایک موقف پر متفق ہوگئے ہیں۔ اپوزیشن ارکان نے حکومت کے ترمیمی نوٹس کی حمایت کر دی۔مولانا غیاث الدین اور فقیر حسین ڈوگر کا کہنا ہے کہ اگر کوئی رکن 5 اجلاسوں میں حلف نہیں اٹھاتا تو اس کی رکنیت منسوخ کی جائے۔ارکان اسمبلی نے مزید کہا کہ حلف نہ اٹھانا عوام کی تضحیک اور مقدس ایوان کی توہین بھی ہے۔ ۔۔۔۔ پنجاب اسمبلی میں سابق وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان کو ڈی سیٹ کرنے کا معاملہ۔ حکومت اور اپوزیشن ایک پیچ پر آگئے۔ حکومتی اور بعض اپوزیشن ارکان کا کہنا ہے چودھری نثار حلف نہ اٹھا کر عوام کے مینڈیٹ کی توہین کر رہے ہیں۔ منتخب ارکان کا حلف نہ اٹھانا بھاری پڑ سکتا ہے۔حلف نہ اٹھانے والے چودھری نثار علی خان کو ڈی سیٹ کرنے کیلئےحکومت اور اپوزیشن ایک موقف پر متفق ہوگئے ہیں۔ اپوزیشن ارکان نے حکومت کے ترمیمی نوٹس کی حمایت کر دی۔ مولانا غیاث الدین اور فقیر حسین ڈوگر کا کہنا ہے کہ اگر کوئی رکن 5 اجلاسوں میں حلف نہیں اٹھاتا تو اس کی رکنیت منسوخ کی جائے۔ارکان اسمبلی نے مزید کہا کہ حلف نہ اٹھانا عوام کی تضحیک اور مقدس ایوان کی توہین بھی ہے۔
[wpna_ad placement_id=”964352193767265_964352353767249″]

(Visited 1 times, 1 visits today)

اپنا تبصرہ بھیجیں