اس سے اچھا تھا کہ ڈیم فنڈز میں پیسے جمع کروا دو۔۔۔۔پاکستانی اداکارہ ایمن کو شادی کرنے پر سوشل میڈیا صارفین نے آڑھے ہاتھوں لے لیا

" >

کراچی (ویب ڈیسک) پاکستانی شوبزکی خوبصورت جوڑی ایمن خان اورمنیب بٹ کو شادی کی طویل رسموں اورشادی پر پانی کی طرح پیسہ بہانے پر سوشل میڈیا پرشدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔نامور پاکستانی اداکارہ ایمن خان اور اداکار منیب بٹ کی شادی کی رسمیں گزشتہ کئی ہفتوں سے جاری ہیں،

مہندی، مایوں، ڈھولکی اور نہ جانے کون کون سی رسموں کے بعد دونوں رواں ہفتے کی ابتدا میں نکاح کے بندھن میں بندھے تھے اور شائقین نے سکون کا سانس لیا تھا، لیکن شادی کے مختلف فنکشنزاب بھی مسلسل جاری ہیں جنہوں نے سوشل میڈیا صارفین کو زچ کرکے رکھ دیا ہے۔ شادی پر بے انتہا فضول خرچہ کرنے اور پیسہ پانی کی طرح بہانے پر صارفین نے اسٹار جوڑی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے آڑے ہاتھوں لے لیا۔سوشل میڈیا صارفین نے شادی کی طویل رسموں پر غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پیسہ اس طرح ضائع کرنے سے بہتر ہے یہ لوگ پیسے کو کسی ضروری کام میں لگائیں۔ ایک صارف نے لکھا یہ دونوں شادی پرپانی کی طرح پیسہ بہاکرغیرحقیقی رسموں کو بڑھاوا دے رہے ہیں، ہمارے یہاں پہلے ہی شادی کی مختلف رسموں کے نام پر پیسہ ضائع کیا جاتا ہے مہربانی کرکے یہ مت کریں کیونکہ یہاں اور بہت سارے لوگ ہیں جو شادی کی چھوٹی سی تقریب کے بھی متحمل نہیں۔کچھ صارفین نے شادی کی طویل رسموں کا مذاق اڑاتے ہوئے اپنے غصے کااظہار کیا۔ایک صارف نے مختلف رسموں اور فنکشنز کی زیادتی اور ان پر لٹائے جانے والے پیسوں کی مخالفت کرتے ہوئے کہا ہمیں معلوم ہے آپ لوگوں کے پاس بے تحاشہ پیسہ ہے، آپ لوگ اتنا پیسہ خرچ کرکے کیا ثابت کرنا چاہتے ہو کہ لوگ آپ کو مثال بنائیں اور آپ کی تقلید کریں، بہت افسوسناک بات ہے۔کچھ صارفین نے لکھا دونوں بہنیں بے حساب پیسہ کماچکی ہیں اب سمجھ نہیں آرہا کہاں خرچ کریں، حد ہے فضول خرچی کی ڈیم فنڈ میں ہی دے دیتیں کیونکہ پانی تو یہ لوگ بھی استعمال کرتی ہیں۔کچھ لوگ اس طویل اور بے انتہا لمبی شادی سے اس حد تک تنگ آچکے ہیں کہ سوشل میڈیا پر اس کا اظہار کیے بغیر نہیں رہ سکے۔ کچھ لوگوں نے شادی کو بھارتی ڈراموں سے تشبیہ دی جو ختم ہونے کانام ہی نہیں لے رہی۔ یہاں تک کہ معروف یوٹیوبر زید علی نے بھی اس شادی کو ٹیسٹ میچ قراردیا بعد ازاں انہوں نے اپنا کمنٹ ڈیلیٹ کردیا۔

(Visited 6 times, 1 visits today)

اپنا تبصرہ بھیجیں