فوج کیخلاف متنازعہ بیان بازی نے نہال ہاشمی کیلئے نئی مشکل کھڑی کردی۔۔۔ عدالت سے ناقابل یقین بریکنگ نیوز آگئی

" >

لاہور (ویب ڈیسک) فوج کے خلاف متنازع بیان دینے پر مقامی وکیل تجمل حسین نے انتہائی قدم اٹھاتے ہوئے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے متنازع رہنما نہال ہاشمی کو قانونی نوٹس بھجوا دیا ہے۔ نوٹس کے متن میں لکھا گیا ہے کہ نہال ہاشمی نے اپنے بیان میں پاک افواج کی

قربانیوں کی نفی کی اور پاک فوج پر بے بنیاد الزامات عائد کیے۔ نوٹس میں کہا گیا کہ متنازع بیان کے سبب پاکستانی عوام نہ صرف نہال ہاشمی کے ان بے بنیاد اور شرمناک الزامات کی مذمت کرتے ہیں بلکہ اس حوالے سے عوام میں سخت اضطراب اور غم و غصہ پایا جاتا ہے۔ نہال ہاشمی کو کہا گیا ہے کہ نوٹس موصول ہونے کے 14 روز میں پریس کانفرنس کے ذریعے سب کے سامنے غیر مشروط معافی مانگیں، بصورت دیگر پاکستان کے عزت و وقار کو ٹھیس پہنچانے پر 50 کروڑ روپے بطور جرمانہ ڈیم فنڈ میں جمع کروائیں۔ اس سے قبل لاہور ہائی کورٹ کے وکیل تجمل حسین نے نہال ہاشمی کے خلاف مقدمے کے اندراج کے لیے تھانہ سول لائن میں درخواست بھی جمع کروائی تھی۔ درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا تھا کہ نہال ہاشمی توہین عدالت کیس میں سزا یافتہ ہیں اور وہ پاک فوج کے خلاف بیان دے کر اداروں کی تذلیل کے مرتکب ہوئے ہیں، اُن کے اس اقدام سے ہر پاکستانی کی دل آزاری ہوئی ہے۔ درخواست گزار نے استدعا کی تھی کہ نہال ہاشمی کے خلاف مقدمہ درج کر کے قانونی کارروائی کی جائے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ نہال ہاشمی کے بیان سے پارٹی کا کوئی لینا دینا نہیں اور یہ ان کے ذاتی خیالات ہیں۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ’نہال ہاشمی کو پاکستان مسلم لیگ (ن) سے خارج کردیا گیا تھا اس لیے پارٹی ان کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کرسکتی‘۔

(Visited 38 times, 1 visits today)

اپنا تبصرہ بھیجیں